نہیں مانتا، نہیں مانتا، نہیں مانتا، ظفراللہ جمالی کا نواز شریف کو چیلنج، دھماکہ خیز اعلان کر دیا

0
15


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سابق وزیراعظم میر ظفراللہ جمالی نے کہا کہ نواز شریف جتنا بھی بول لیں عوام فوج اور عدلیہ کے ساتھ کھڑی ہے، تفصیلات کے مطابق میر ظفراللہ جمالی نے ایک نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں میزبان کے سوال کہ اس وقت دو ادارے پاکستان کی بقا کے ضامن ہیں فوج اور عدالت، نواز شریف اس وقت ان دونوں اداروں کو نشانہ بنا رہے ہیں، بین الاقوامی طاقتیں بھی یہی چاہتی ہیں کہ یہ دونوں ادارے کمزور ہوں تو میاں نواز شریف کس کی مدد کر رہے ہیں ،اس کے جواب میں میر ظفراللہ جمالی

نے کہاکہ پاکستان کے عوام عدالت اور فوج کے ساتھ کھڑے رہیں گے، ہم کسی اور کی بات نہیں مانیں گے، نہیں مانیں گے، نہیں مانیں گے اور مجھے یقین ہے کہ عوام عدالت اور فوج کے ساتھ کھڑی ہو گی، 65 کی جنگ میں عوام فوج کے ساتھ تھی اس لیے ہم جنگ جیت گئے اور 71 کی جنگ ہم اس لیے ہارے کہ عوام فوج کے ساتھ نہیں تھی، انہوں نے کہا کہ وزیراعظم، صدر، گورنر، وزیراعلیٰ کوئی بھی اگر ان اداروں کے خلاف کام کر رہا ہو تو میں ان سے کہوں گا کہ پاکستان کے لیے برائی شروع ہونے سے پہلے ہی برائی کو ختم کر دو ۔گفتگو کے دوران میزبان نے کہا کہ وہ کہتے ہیں کہ عوام ہمارے ساتھ کھڑی ہے، جس کے جواب میں میر ظفراللہ نے کہا کہ عوام نے یہ کہا تھا کہ ختم نبوت پر کیس چلاؤ، یہ عوام نے کہا تھا ان کو کس نے کہا تھا یہ لوگ سارے الٹے سیدھے کام کر رہے ہیں، یہ لوگ ناجائز کام کر رہے ہیں، رشوت بھی ہے، کمیشن بھی ہے، کک بیکس بھی ہیں اور پھر ناراضگی بھی ہے، دہشت گردی بھی ہے، اپنے ایم این ایز کی لسٹ بنا رہے ہیں کہ دہشت گرد ہیں، میر ظفراللہ جمالی نے کہاکہ باقی پارلیمنٹیرین کیوں سو رہے ہیں، میں نے تو ان سے گزارش کی تھی کہ آؤ سامنے ، اس اسمبلی کی ضرورت نہیں ہے، سینٹ میں کوئی بل پاس کرانے کے لیے دو تہائی کی اکثریت چاہیے ہوتی ہے یہ لوگ صرف ایک ووٹ سے جیتے ہیں، انہوں نے مذاق بنا رکھا ہے۔

Have Your Say