احتساب عدالت میں پولیس افسر کو تھپڑ مارنے والاپنجاب حکومت کا افسرنکلا، نواز شریف اور مریم نواز سےکیا تعلق ہے؟دھماکہ خیز انکشاف

0
25


اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)احتساب عدالت میں انسپکٹر شکیل کو تھپڑ مارنے والا شخص کوئی اور نہیں بلکہ ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل پنجاب خاور اکرم بھٹی نکلا۔ نجی ٹی وی نائنٹی ٹو نیوز کی رپورٹ کے مطابق سابق وزیراعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز اور ان کے شوہر کیپٹن صفدر کی احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر پولیس کی جانب سے وکلا اور لیگی کارکنوںکو عدالت میں داخل ہونے سے روکنے پر شدید ہنگامہ آرائی ہوئی اور اس موقع پر پولیس نے وکلا پر لاٹھی چارج بھی کیا جس سے دو وکیل شدید زخمی ہو گئے جبکہ خواتین وکلا کے ساتھ

بھی بدترین سلوک کیا گیا۔ واقعہ کے خلاف وکلا سراپا احتجاج بن گئے اور انہوں نے زبردستی عدالت میں داخل ہونے کی کوشش کی۔ اس موقع پر احتساب عدالت کے باہر تعینات انسپکٹر شکیل نے جب کالے کوٹوں میں ملبوس وکلا کو کمرہ عدالت میں داخلے سے روکا تو ایک شخص جو کالے کوٹ میں ملبوس تھا نے انسپکٹر شکیل کو تھپڑ دے مارا ۔ تھپڑ مارنے والے شخص سے متعلق نجی ٹی وی نائنٹی ٹو نیوز نے انکشاف کیا ہے کہ یہ شخص کوئی اور نہیں بلکہ ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل پنجاب خاور اکرام بھٹی ہے۔ رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ خاور اکرام بھٹی ن لیگ کے ورکر ہیں اور انہیں ان کی خدمات کے اعتراف میں اس عہدے سے نوازا گیا ہے۔ خاور اکرام بھٹی مسلم لیگ ن لائرز فورم کے جنرل سیکرٹری بھی رہ چکے ہیں جبکہ ن لیگ لائرز فورم کے ٹکٹ پر یہ لاہور ہائیکورٹ بار کے نائب صدر بھی منتخب ہو چکے ہیں۔ واضح رہے کہ خاور اکرام بھٹی پنجاب حکومت کی معاونت کیلئے ہیں اور ان کا اس طرح اسلام آباد میں احتساب عدالت میں ہونے کا کوئی جواز نہیں ۔ لا افسران نے ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل خاورکے اس عمل کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

Have Your Say